Pakistan latest updates, breaking news, news in urdu

اربوں کی کرپشن روکنے کیلئے اے جی پی آر میں میں اصلاحات کافیصلہ

ادائیگیوں کو شفاف بنانے کےلئے کمپیوٹرائز ڈ ای آر پی سسٹم فعال کیا جائے گا

96
Spread the love

اسلام آباد:وفاقی حکومت نے اے جی پی آر میں ہونے والی اربوں روپے کی کرپشن کے خاتمے کےلئے اصلاحات لانے کا فیصلہ کر لیا ہے ، اے جی پی آر کے زریعے ہونے والی تمام ادائیگیوں کو شفاف بنانے کےلئے کمپیوٹرائز ڈ ای آر پی سسٹم کو فعال کیا جائے گا،اے جی پی آر میں گریڈ 21اور22کے افسران کی تعیناتیوں اور ٹرانسفرز کےلئے وزیر اعظم کی منظوری لی جائے گی اے جی پی آر میں تعینات افسران کے اثاثوں کی انکوائری ایف آئی اے کے ذریعے سے کرائی جائے گی۔وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز کے ہمرا مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم انسپکشن ٹیم کے چیئرمین احمد یا ر ہراج نے کہاکہ وزیر اعظم انسپکشن ٹیم نے آے جی پی آر میں ہونے والی کرپشن کے خاتمے اور عوام کے پیسوں کے ضیاع کو روکنے کےلئے سفارشات تیار کی ہیں انہوںنے بتایاکہ اس وقت حکومتی سطح پر تمام خریداریوں کی ادئیگیاں اے جی پی آر کے زریعے کی جاتی ہیں اور یہ دیکھا گیا ہے کہ سرکاری سطح پر خریداریوں کے ریٹس مارکیٹ کے مقابلے مٰں بہت زیادہ ہوتے ہیں انہوںنے کہاکہ اگر حکومت ایک کھرب روپے کی خریداری کرتی ہے تو اس میں ٹیکسز کے علاوہ بھی 150سے لیکر 200ارب روپے تک زیادہ ادائیگیاں کی جاتی ہیں اور اگر اس میں صوبائی سطح پر قائم دفاتر کے ڈیٹا کو بھی شامل کیا جائے تو اندازً ایک سال کے دوران حکومت 300سے 350ارب روپے تک زائد رقم ادا کرتی ہے انہوںنے کہاکہ بدقسمتی سے ملک کے تمام محکموں میں کرپشن بہت زیادہ ہے ۔