Pakistan latest updates, breaking news, news in urdu

پنجاب میں صحت کی سہولتوں پر خصوصی توجہ دی جائے:عمران خان

صوبہ میں صحت کے حوالے سے اجلاس،گیس سے متعلق جامع حکمت عملی کی ہدایت

290
Spread the love

اسلام آباد:وزیرِ اعظم عمران خان کی زیر صدارت صوبہ پنجاب میں صحت کے شعبے کی اپ گریڈیشن کے حوالے سے اجلاس ہوا جس میں وزیرِ اطلاعات سنیٹر شبلی فراز، اسد عمر، ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ، وزیرِ اعلی پنجاب عثمان بزدار، وزیرِ خزانہ پنجاب مہاشم جوان بخت، یاسمین راشد، وزیرِ اعظم کے معاون خصوصی لیفٹیننٹ جنرل (ر)عاصم سلیم باجوہ، شہباز گل، چیف سیکرٹری پنجاب و دیگر سینئر افسران شریک ہوئے،وزیرِ اعظم کو صوبہ پنجاب میں صحت کے شعبے کی بہتری اور اپ گریڈیشن خصوصا وفاق کی معاونت سے صحت کے مختلف منصوبوں پر عمل درآمد اور ان کے عوام الناس کے لئے ثمرات پر تفصیلی بریفنگ دی گئی وزیرِ اعظم نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بدقسمتی سے ماضی میں صحت کی معیاری سہولتوں کی دستیابی خصوصا پنجاب کے کم ترقی یافتہ علاقوں میں دستیابی کو نظرانداز کیا جاتا رہا۔ انہوں نے کہا کہ ماں اور بچے کی صحت سے متعلق صحت کے مراکز پر خصوصی توجہ دی جائے کیونکہ اس شعبے میں سہولیات ناکافی ہیں۔ وزیرِ اعظم نے کہا کہ صوبے میں معیاری صحت کی سہولیات اور ہسپتالوں کی تعمیرکے ساتھ ساتھ موجود ہسپتالوں کے بہتر انتظام اور ان میں سہولیات کی فراہمی پر خصوصی توجہ دی جائے۔ وزیرِ اعظم نے ہدایت کی کہ ہسپتالوں اور خصوصا قائم کیے جانیوالے نئے مراکز صحت کے انتظام کو جدید بنیادوں پر اور منظم طریقے سے چلانے پر خصوصی توجہ دی جائے۔وزیرِ اعظم نے پنجاب حکومت کو ہدایت کی کہ صحت کے نظام کی بہتری کے لئے نجی شعبے کی شراکت داری کی حوصلہ افزائی کی جائے۔ بعد ازاں وزیرِ اعظم کو آبپاشی، صوبے کے آبی وسائل کے بہتر انتظام کے حوالے سے مختلف مجوزہ منصوبوں پر بھی بریفنگ دی گئی۔علاوہ ازیںوزیرِاعظم عمران خان کی زیر صدارت گیس کے شعبے سے متعلقہ امور کے حوالے سے اجلاس ہواملک میں گیس کی طلب و رسد، گیس انفراسٹرکچر، گیس کے شعبے میں درپیش مسائل اور مستقبل کی ضروریات کو مد نظر رکھتے ہوئے لائحہ عمل کے حوالے سے تفصیلی تبادلہ خیال کیاگیا،وزیرِ اعظم نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گیس کے شعبے میں ایک طرف بڑھتی ہوئی گھریلو اور صنعتی شعبے کی ضروریات اور دوسری جانب مقامی طور پر موجود گیس کے محدود ذخائر کی وجہ سے پیدا ہونے والی صورتحال خصوصا مستقبل قریب کی صورتحال کو مد نظر رکھتے ہوئے فوریطور پر جامع منصوبہ بندی کی ضرورت ہے۔ وزیرِ اعظم نے معاون خصوصی ندیم بابر کو ہدایت کی کہ گیس کے شعبے سے متعلق تمام حقائق مشترکہ مفادات کی کونسل کے سامنے رکھے جائیں۔ اس کے ساتھ ساتھ شعبے کے نامور ماہرین سے مشاورت کا عمل شروع کیا جائے تاکہ گیس سے متعلقہ معاملات کا پائیدار حل تلاش کیا جا سکے۔